ورلڈ کپ سکواڈ میں تبدیلیاں: پرفارم کرنے والے شرجیل خان سینچری بنا کر بھی منہ دیکھتے رہ گئے! سلیکٹرز کی جانب سے نظر انداز

Image

نیشنل ٹی ٹونٹی کپ کا آغاز 23 ستمبر سے راولپنڈی سٹیڈیم میں ہوا جہاں ایونٹ میں اب تک 24 میچز کھیلے جاچکے ہیں۔ ایونٹ کا پہلا فیز پنڈی سٹیڈیم میں ہوا جس میں 18 میچز کھیلے گۓ جبکہ دوسرا فیز لاہور میں جاری ہے۔

ایونٹ کے 24ویں میچ میں آج سدرن پنجاب اور سندھ کی ٹیمیں آمنے سامنے تھیں۔سدرن پنجاب نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا۔سدرن پنجاب کی جانب سے عامر یامین جبکہ سندھ کی جانب سے سرفراز احمد نے کپتانی کے فرائض سرانجام دیے۔

تفصیلات کے مطابق آج ورلڈکپ اسکواڈ کا اعلان ہوا جس میں شرجیل خان کو شامل نہیں کیا گیا۔ شرجیل خان جو کہ سندھ کی نمائندگی کر رہے ہیں، اُنہوں نے آج پھر ایک دھماکے دار اننگ کھیل کر سلیکٹرز کو تمانچا دے مارا۔ شرجیل خان جو گزشتہ کئ میچز سے زبردست پرفارم کر رہے تھے اور شائقین یہ گمان کررہے تھے کہ شرجیل خان کی واپسی کو یقینی بنایا جاۓ گا لیکن ایسا ہرگز نہیں ہوا۔ شرجیل خان کی تمام پرفارمنس کو رد کر کے اُنہیں اسکواڈ میں شامل نہیں کیا گیا۔

اسکواڈ میں شامل نہ ہونے والے شرجیل خان نے آج سدرن پنجاب کے خلاف جارحانہ کھیل پیش کرتے ہوۓ 180 کی اسٹرائیک ریٹ سے محض 56 گیندوں پر 101 رنز کی بھرپور اننگ کھیل دی جس کے بعد قومی شائقین کی جانب سے سلیکٹرز کو مزید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے اورشرجیل کی واپسی کے لیے اپیل کی جارہی ہے۔

شرجیل خان نے اپنی اس دھماکے دار اننگ میں 13 چوکے اور 4 زور دار چھکے بھی لگاۓ۔ شرجیل خان کی اس دھویں دار بیٹنگ کی بدولت نا صرف سندھ کی ٹیم نے میچ میں فتح حاصل کی بلکہ اُنہیں مین آف دی میچ کا اعزاز بھی دیا گیا۔

واضح رہے کہ آج ورلڈکپ کے لیے نئے اسکواڈ کا اعلان ہوا جس میں فخر زمان، حیدر علی اور سرفراز خان کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ تاہم یہ بھی خیال رہے کہ پاکستان 10 اکتوبر تک اسکواڈ میں مزید تبدیلیاں کر سکتا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *