جب میں پاکستان گیا تھا تو وہاں جیسی سیکیورٹی ہمیں ملی تھی ویسی میں نے کبھی نہیں دیکھی۔۔ آسٹریلیا کے کپتان ٹم پین نے بھی پاکستان کی تعریف کر دی

There may be some players who won't be comfortable going to Pakistan- Australia's Tim Paine

ٹم پین نے آسٹریلیا کا دورہ پاکستان کا اعلان ہونے کے بعد اپنے بیان میں کہا ہے کہ جب میں ورلڈ الیون کے پاکستان ٹور کے ساتھ پاکستان آیا تھا تو ہمیں اعلیٰ کوالٹی کیسکیورٹی ملی تھی۔

تفصیلات کے مطابق ورلڈکپ ٹی ٹونٹی کے دوران آسٹریلیا کا دورہ پاکستان کا اعلان ہوا ۔ آسٹریلیا کی جانب سے آئندہ سال پاکستان کا دورے کا اعلان کیا گیا ہے۔ اس دورے میں آسٹریلیا نے تین ٹیسٹ میچز، تین ون ڈے میچز جبکہ ایک ٹی ٹونٹی میچ کھیلنا ہے۔

آسٹریلوی کپتان ٹم پین نے پریس کانفرنس کے دوران گفتگو کرتے ہوۓ کہا کہ پاکستان میں ہمیں جو سکیورٹی ملے گی وہ شائد ہی کسی کو ملے۔ ٹم پین کا کہنا تھا کہ جب ہم پاکستان گۓ تھے تو ہماری سکیورٹی کے لیے ہیلی کاپٹر سمیت دیگر سکیورٹی انتظامات کیے گۓ تھے۔

اُن کا کہنا تھا کہ ہماری ٹیم بس کے ساتھ ساتھ دیگر سکیورٹی فورسس موجود تھیں اور ہم خود کو انتہائ محفوظ معلوم کررہے تھے۔ اُن کا کہنا تھا کہ ہر ایک کلومیٹر پر چیک پوسٹ موجود تھا جو ہماری سکیورٹی کے لیے موجود تھا۔

اُن کا کہنا تھا کہ میں دیگر کھلاڑیوں کو مطمئین کرنے کی کوشش کررہا ہوں۔ انہیں یہ بتانے کی کوشش کی جارہی ہے کہ پاکستان ایک محفوظ ملک ہے اور یہاں سکیورٹی کا کوئ مسئلہ نہیں اور یہ دنیا نہ گزشتہ سالوں میں دیکھا ہے۔

آسٹریلوی کپتان ٹم پین کا کہنا تھا کہ کھلاڑیوں کو مطمئن کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ ہر کھلاڑی مطمئن ہوکر ہی پاکستان کے ٹور کے لیے آۓ گا اور میں اُمید کرتا ہوں کہ ایک اچھی سیریز کھیلی جاۓ گی۔

واضح رہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان سیریز آئندہ سال پاکستان میں ہوگی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *