رضوان اور بابر رواں برس کی کامیاب ترین جوڑی بن گئے

Majestic innings': All-round praise for Babar, Rizwan after Pakistan cruise  to victory against SA - Pakistan - DAWN.COM

ورلڈ کپ میں ٹیم توقعات کا بوجھ پھر بابراعظم اور محمد رضوان کے کندھوں پر ہوگا جب کہ دونوں رواں برس ٹی 20 انٹرنیشنل کی کامیاب ترین جوڑی بن گئے۔

گزشتہ کچھ عرصے سے پاکستان کرکٹ ٹیم ٹوئنٹی 20 فارمیٹ میں اوپننگ جوڑی بابر اعظم اور محمد رضوان پر بہت زیادہ انحصار کررہی ہے،رواں ماہ شیڈول ٹوئنٹی 20 ورلڈ کپ میں بھی توقعات کا بوجھ ان دونوں کے کندھوں پر ہوگا۔رواں برس ٹی 20 فارمیٹ میں سب سے کامیاب جوڑی بھی بابر اور رضوان ہی کی ہے۔

دونوں نے56.61 کی اوسط سے 736 رنز اسکور کیے، ان کے بعد دوسرے نمبر پر موجود شیکھر دھون اور پارتھیو شاہ نے 47.46 کی ایوریج سے 712 رنز بنائے ہیں۔

بابر اور رضوان کی اس فارمیٹ میں انفرادی کارکردگی بھی کافی بہتر ہے،کپتان کو تیز ترین 2000 ٹی 20 انٹرنیشنل رنز بنانے کا اعزاز حاصل ہے۔ اس معاملے میں ویراٹ کوہلی دوسرے نمبر پر ہیں،بابر56 میں سے 21 اننگز میں ففٹی پلس اسکور بنا چکے۔

رضوان نے اس سال 14 اننگز کے دوران 7 نصف سنچریاں اور ایک سنچری بنائی،دلچسپ بات یہ ہے کہ بطور اوپننگ جوڑی دونوں 52.1 رنز فی اننگز کے حساب سے اسکور کرچکے۔

10 اننگز میں دونوں نے اوپننگ کی اور صرف ایک بار ان میں سے کوئی کم سے کم 35 تک نہیں پہنچ سکا،دونوں نے مل کر فی اوور 9.12 رنز بنائے جورواں برس پاکستان کی جانب سے آزمائی گئی دیگر 2 اوپننگ جوڑیوں سے زیادہ ہے،رضوان اور شرجیل کا فی اوور اسکور 8.23 اور رضوان و حیدر علی کا 8.27 رہا۔

دوسری جانب ورلڈ کپ 2019 کے بعد ٹوئنٹی 20 فارمیٹ میں پاکستان کی ٹیم بلندیوں کی جانب گامزن رہی مگر پھر کارکردگی میں زوال آ گیا، مکی آرتھر کی کوچنگ کے دوران 3 برس میں پاکستان نے 37 میں 30 ٹوئنٹی 20 میچز جیتے اس کے بعد مصباح الحق آئے تو گرین شرٹس اس فارمیٹ میں 34 میں سے صرف 16 فتوحات ہی حاصل کرپائے، ٹیم بھی نمبر ون سے تیسری پوزیشن پر چلی گئی، اب  ٹیم مینجمنٹ میں ایک اور تبدیلی ہوئی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *